261

تعلیم کے نام پر فراڈ

بچپن میں ھم میں بھوت گھر تو سنتے تھے بھوت سکول نھیں سنا
آپ کو جان کر حیرت ھو گی کے پاکستان میں بیسک ایجوکیشن کمیونٹی سکول پروگرام شروع کیا گیا جس کے تحت پہلی سے پانچویں جماعت تک ایک ٹیچر ایک سکول کے نام سے پروگرام شروع کیا گیا
اس کا مقصد غریب علاقوں سے طالب علموں کو مفت تعلیم مہیا کرنا تھا

پبلکس اکاؤنٹ کمیٹی جس کی سربراہی اپوزیشن لیڈر سید خورشید شاہ کے پاس ھے
انہوں نے کھوج لگایا کے 2350 سکول ایسے ھیں جن کا کوئی وجود ھی نھیں
ان سکولوں کے 2350 جعلی اساتزہ کی تنخواہوں سے کون مفید ھوا
دلچسپ بات ھے کے نادرہ کا کوئی ریکارڈ موجود نھیں
ان سکولوں کے اساتذہ کون
کس نے یے پیسہ کھایا
تعلیم کے نام پر اتنا بڑا فراڈ

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں